ہانگ کانگ میں اردو بولنے والے پولیس اہلکار کے چرچے

ہانگ کانگ میں آج کل روانی سے اردو بولنے والے ایک پاکستانی نژاد پولیس اہلکار کے چرچے ہیں، جنھوں نے خودکشی کی کوشش کرنے والے اپنے ایک ہم وطن کی جان بچائی۔

برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کی ایک رپورٹ کے مطابق ایک پاکستانی شخص خودکشی کی نیت سے ایک زیر تعمیر عمارت کے قریب موجود 20 میٹر اونچی کرین پر چڑھ گیا، جس کے بعد پولیس کو طلب کیا گیا۔

اس موقع پر پاکستانی نژاد کانسٹیبل افضال ظفر کرین پر چڑھے اور روانی سے اردو بولتے ہوئے مذکورہ شخص کو نیچے آنے پر رضامند کیا، جس کے بعد اسے ہسپتال منتقل کردیا گیا۔

کانسٹیبل افضال کے مطابق، ‘میں نے اکیڈمی میں سیکھی گئی تکنیکس ہی استعمال کیں، میرا خیال ہے کہ اس نے خود کو محفوظ تصور کیا ہوگا، جب اسے پتہ چلا کہ میں اس سے اسی کی زبان میں بات کرسکتا ہوں’۔

20 سالہ افضال اپنے ضلع میں واحد پاکستانی نژاد پولیس اہلکار ہیں، جنھوں نے ایک سال قبل پولیس فورس میں شمولیت اختیار کی۔

اس واقعے کے بعد کانسٹیبل افضال ظفر کے لیے ایک فیس بک فین کلب بھی بنایا جاچکا ہے، جہاں زورشور سے انھیں سراہا جارہا ہے۔

اس حوالے سے ایک خاتون نے فیس بک پر لکھا، ‘وہ بہت ہینڈسم ہیں اور ساتھ ہی بہت نرم دل بھی’۔

Leave your vote

0 points
Upvote Downvote

Total votes: 0

Upvotes: 0

Upvotes percentage: 0.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

اپنا تبصرہ بھیجیں