کورونا وبا: پاکستان میں ایک ہزار سے زائد اموات، مصدقہ کیسز 46 ہزار 915 ہوگئے

دنیا بھر میں پھیلنے والا مہلک کورونا وائرس پاکستان میں بھی اپنے پنجے گاڑ چکا ہے اور آئے روز اس کے کیسز میں اضافہ دیکھا جارہا ہے جبکہ اموات بھی بڑھ رہی ہیں۔

ملک میں اب تک مصدقہ کیسز کی تعداد 46 ہزار 915 ہوگئی ہے جبکہ اموات 1003 تک جا پہنچی ہیں۔

خیال رہے کہ ملک میں 26 فروری 2020 کو کورونا وائرس کا پہلا کیس ملک کے سب سے بڑے شہر کراچی میں سامنے آیا تھا جس کے بعد یہ وائرس پورے ملک میں پھیل گیا۔

یہ بھی مدنظر رہے کہ اس وقت پورے ملک میں اس وائرس سے سب سے زیادہ متاثر شہر کراچی ہی ہے جہاں کیسز کی تعداد تقریباً 14 ہزار ہے جبکہ اموات بھی 200 سے زیادہ ہوچکی ہیں۔

اگر ملک کی مجموعی صورتحال کی بات کریں تو ابتدا میں یہ وائرس اتنی تیزی سے نہیں پھیلا تاہم اب ہر گزرتے دن کے ساتھ اس کے کیسز میں اضافہ ہورہا جبکہ اموات کی تعداد بھی بڑھ رہی ہے۔

پاکستان میں 26 فروری سے 31 مارچ تک لگ بھگ 2 ہزار کیسز اور 26 اموات تھیں جس میں اپریل میں اضافہ ہوا اور 30 اپریل تک ساڑھے 16 ہزار سے زائد کیسز اور اموات 385 تک پہنچ گئیں۔

تاہم مئی کے آغاز سے ہی اس وائرس کی ایک نئی لہر دیکھنے میں آئی اور پاکستان میں صرف مئی کے گزشتہ 19 روز میں 28 ہزار سے زائد کیسز اور 584 اموات کا اضافہ ہوا۔

آج (20 مئی) کو بھی ملک میں وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد بھی بڑھی جبکہ اس سے صحتیاب ہونے والوں میں بھی اضافہ سامنے آیا۔

سندھ
سندھ میں کورونا وائرس کے ایک روز کے سب سے زیادہ ایک ہزار 17 نئے کیسز کا اضافہ ہوا جبکہ 17 اموات بھی ہوئیں۔

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے بتایا کہ صوبے میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 6 ہزار 164 ٹیسٹ کیے گئے، جس میں سے ایک ہزار 17 کے نتائج مثبت آئے۔

مراد علی شاہ کے مطابق ان ایک ہزار 17 کیسز میں سے کراچی میں 813 کیسز سامنے آئے، ساتھ ہی ان کا کہنا تھا کہ نئے نتائج کے بعد صوبے میں اب تک متاثرہ ہونے والوں کی تعداد 18 ہزار 964 ہوگئی۔

وزیراعلیٰ سندھ کے مطابق صوبے میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 17 اموات بھی ہوئیں جس کے ساتھ ہی یہاں مجموعی اموات کی تعداد 316 تک پہنچ گئی۔

پنجاب
پنجاب میں کورونا وبا کے 709 نئے کیسز اور 17 اموات کا اضافہ ہوا

ترجمان پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر کے مطابق صوبے میں ان نئے کیسز کے بعد مجموعی متاثرین کی تعداد 16 ہزار 685 ہوگئی۔

انہوں نے بتایا کہ گزشتہ 24 گھنٹوں میں مزید 17 اموات بھی ہوئیں، جس سے یہ تعداد 290 تک جا پہنچی۔

اسلام آباد
وفاقی دارالحکومت اسلام آباد جو ابتدا میں وائرس سے کم متاثر تھا اب یہاں کیسز کی ایک نئی لہر دیکھی جارہی ہے اور 2 ہندسوں میں آنے والے کیسز اب 3 ہندسوں تک پہنچ گئے ہیں۔

سرکاری سطح پر فراہم کردہ اعداد و شمار کے مطابق اسلام آباد میں مزید 104 نئے کیسز کا اضافہ ہوا۔

ان نئے کیسز کے بعد وہاں متاثرین کی تعداد 1034 سے بڑھ کر 1138 تک پہنچ گئی۔

گلگت بلتستان
ادھر گلگت بلتستان میں بھی اس عالمی وبا کے نئے متاثرین کی تصدیق ہوئی۔

اعداد و شمار کے مطابق گلگت بلتستان میں کورونا وبا کے مزید 6 کیسز رپورٹ ہوئے۔

جس کے بعد علاقے میں اب تک کورونا وائرس سے متاثر ہونے والوں کی تعداد 550 سے بڑھ کر 556 ہوگئی۔

آزاد کشمیر
اسی طرح وائرس سے اب تک سب سے کم متاثر علاقے آزاد کشمیر میں بھی کیسز میں اضافہ دیکھنے میں آیا۔

سرکاری اعداد و شمار کے مطابق آزاد کشمیر میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 18 نئے مریض رپورٹ ہوئے۔

ان نئے مریضوں کے بعد وہاں متاثرین کی مجموعی تعداد 115 سے بڑھ کر 133 تک پہنچ گئی۔

صحتیاب افراد
دوسری جانب ان کیسز کے باوجود لوگ اس وائرس کو تیزی سے شکست دے کر صحتیاب ہورہے ہیں۔

ملک میں کیسز میں اضافے کی طرح اس شرح میں بھی اضافہ دیکھا جارہا ہے اور آج بھی 612 مریض شفایاب ہوگئے۔

جس کے بعد اب تک اس وائرس کو شکست دینے والوں کی تعداد 12489 سے بڑھ کر 13101 تک جاپہنچی۔

مجموعی صورتحال
اس کے بعد اگر ملک میں کیسز کے حساب سے ایک جائزہ لیں تو ان 46 ہزار 915 متاثرین میں سے 1003 کا انتقال ہوگیا جبکہ 13 ہزار 101 صحتیاب ہوگئے تو اس طرح ابھی 32 ہزار 811 فعال کیسز موجود ہیں۔

وائرس سے صوبہ سندھ سب سے زیادہ متاثر ہیں جہاں کیسز 18 ہزار 964 ہیں، اس کے علاوہ پنجاب میں 16 ہزار 685 لوگ وائرس کا شکار ہوچکے ہیں۔

خیبرپختونخوا میں یہ تعداد 6 ہزار 554 ہے جبکہ بلوچستان میں 2 ہزار 885 لوگوں کو کورونا نے متاثر کیا ہے۔

اسلام آباد میں 1138، گلگت بلتستان میں 556 جبکہ آزاد کشمیر میں 133 لوگ وائرس سے متاثر ہوچکے ہیں۔

ملک میں اموات کی صورتحال کچھ اس طرح ہے۔

خیبرپختونخوا: 345
سندھ: 316
پنجاب: 290
بلوچستان: 38
اسلام آباد: 09
گلگت بلتستان: 04
آزاد کشمیر: 01

Leave your vote

0 points
Upvote Downvote

Total votes: 0

Upvotes: 0

Upvotes percentage: 0.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

اپنا تبصرہ بھیجیں