ڈاکٹر بننے کی خواہش : اُمیدوار کا ہتھکڑیوں میں امتحان

پشاور: خیبرپختونخوا کے دارالحکومت پشاور میں قائم خیبر میڈیکل یونیورسٹی کے زیرانتظام میڈیکل اور ڈینٹل کالجز کے لیے ہونے والے انٹری ٹیسٹ میں شرکت کیلئے ایک گرفتار اُمیدوار پولیس نفری کے ساتھ ہتھکڑوں میں پہنچ گیا۔

ڈان نیوز کی ایک رپورٹ کے مطابق سائن آف انٹری ٹیسٹ میں 14 فارن ایکٹ کی خلاف ورزی کرنے پر گرفتار ہونے والے ایک افغان نوجوان طالب علم صفی اللہ نے ڈاکٹر بننے کی خواہش میں ہتھکڑی لگے ہاتھوں سے انٹری ٹیسٹ میں شرکت کی۔

رپورٹ کے مطابق خیبر میڈیکل یونیورسٹی میں میڈیکل اور ڈینٹل کالجز کی 2000 سیٹوں کے لیے صوبے کے 5 سینٹرز سے 27571 نے جبکہ پشاور سے 15724 طلباء وطالبات نے انٹری ٹیسٹ میں شرکت کی۔

انٹری ٹیسٹ کے دوران بجلی کی آ نکھ مچولی بھی جاری رہی جس پر انٹری ٹیسٹ میں شرکت کیلئے آئے ہوئے طلبا و طلبات شدید گرمی اورلوڈشیڈنگ کی شکایات کرتے رہے۔

انٹری ٹیسٹ کے لیے بڑی تعداد میں طلبا و طلبا ت کی شرکت کے باعث جہاں صوبائی دارالحکومت میں ٹریفک جام رہا وہیں انتظامیہ کو بھی انتظامات کو بہتر بنانے اور نظم و ضبط کو برقرار رکھنے کے لیے مشکلا ت کا سامنا کرنا پڑا۔

دوسری جانب انتظامیہ نے انٹری ٹیسٹ کے دوران پیش آنے والی مشکلات سے نمٹنے کیلئے حکومت سے آن لائن انٹری ٹیسٹ کا مطالبہ بھی کیا۔

Leave your vote

0 points
Upvote Downvote

Total votes: 0

Upvotes: 0

Upvotes percentage: 0.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

اپنا تبصرہ بھیجیں