چیئرمین نادرا کے وارنٹ گرفتاری واپس

اسلام آباد(پی ایف پی) اسلام آباد ہائی کورٹ نے نیشنل ڈیٹا بیس اینڈ رجسٹریشن اتھارٹی (نادرا) کے چیئرمین عثمان یوسف مبین کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری اُس وقت واپس لے لیے جب ان کے وکیل نے عدالت عالیہ کو آگاہ کیا کہ چھٹی کے دن کی الجھن کی وجہ سے چیئرمین عدالت میں حاضر نہ ہوسکے۔
واضح رہے کہ اسلام آباد کی ضلعی انتظامیہ نے 28 فروری کو جاری کیے گئے ایک نوٹیفکیشن میں اقتصادی تعاون تنظیم (ای سی او) کے سربراہی اجلاس کے پیش نظر یکم مارچ کو عام تعطیل کا اعلان کیا تھا، تاہم سائلین سمیت عدالتی عہدیداران بھی اس حوالے سے تذبذب کا شکار تھے کہ عدالتوں کی بھی تعطیل ہوگی یا نہیں۔
تاہم بدھ (یکم مارچ) کو عدالتیں معمول کے مطابق کام کرتی رہیں۔
عدالت عالیہ نے اسلام آباد ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کی جانب سے مقامی پولیس اسٹیشن اور ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن آفس میں کمپیوٹرائزڈ ریونیو ریکارڈ اور آئی ٹی انفراسٹرکچر کی سہولیات تک رسائی کے حوالے سے دائر کی گئی درخواست پر نادرا چیئرمین کو نوٹس جاری کیا تھا۔
مزید پڑھیں:عدالتی حکم کی عدم تعمیل پر چیئرمین نادرا کے وارنٹ گرفتاری
سماعت کے دوران جسٹس نور الحق قریشی کے مشاہدے میں یہ بات آئی کہ چیئرمین نادرا عدالت میں موجود نہیں۔
جس کے بعد جسٹس نور الحق قریشی نے نادرا چیئرمین کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کردیئے تاہم بعدازاں یہ وارنٹ گرفتاری اُس وقت واپس لے لیے گئے جب نادرا کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ چونکہ ضلعی انتظامیہ نے یکم مارچ کو عام تعطیل کا اعلان کیا تھا، یہی وجہ ہے کہ چیئرمین عثمان مبین نے یہ خیال کیا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ میں بھی تعطیل ہوگی۔
انھوں نے عدالت کو یقین دہانی کروائی کہ نادرا چیئرمین 3 مارچ کو ہونے والی اگلی سماعت میں کورٹ میں پیش ہوجائیں گے۔

Leave your vote

0 points
Upvote Downvote

Total votes: 0

Upvotes: 0

Upvotes percentage: 0.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

اپنا تبصرہ بھیجیں