نیویارک،مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کیخلاف اقوام متحدہ دفتر کے سامنےاحتجاجی مظاہرہ

نیویارک،مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کیخلاف اقوام متحدہ دفتر کے سامنے پاکستانی اور کشمیری کمیونٹی کا احتجاجی مظاہرہ
مظاہرے کی قیادت وفاقی وزیر کامران مائیکل نے کی ،اقوام متحدہ دفتر میں یادداشت بھی پیش کی گئی
بھارت کشمیریوں کی آواز تشدد اور مظالم سے دبا نہیں سکتا، پاکستان دنیا کا ضمیر جگانے کے لئے سرتوڑ کوششیں جاری رکھے گا،وفاقی وزیر کا خطاب
نیو یارک (پی ایف پی)نیویار ک میں اقوام متحدہ کے دفتر کے سامنے پاکستانی اور کشمیری کمیونٹی کا مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کیخلاف احتجاجی مظاہرہ کیا ،احتجاجی مظاہرے کی قیادت وفاقی وزیر برائے انسانی حقوق کامران مائیکل نے کی ،پاکستان کے حق اور بھارت مخالف شدید نعرے بازی کی ،
مظاہرین نے کتبے اور بینرز اٹھا رکھے تھے جن پر کشمیریوں پر ظلم بند کرو،کشمیریوں کا ان حق دو کے نعرے درج تھے ۔اس موقع پر مظاہرین نے اقوام متحدہ دفتر میں ایک یادداشت بھی پیش کی جس میں کہاگیا کہ مقبوضہ کشمیر کے حوالے سے اقوام متحدہ اپنی قراردادوں پر عملدرآمد کراتے ہوئے بھارتی فوج کو مقبوضہ کشمیر سے نکالے۔ا
س موقع پر کامران مائیکل نے احتجاجی مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارت کشمیریوں کی آواز تشدد اور مظالم سے دبا نہیں سکتا۔ پاکستان دنیا کا ضمیر جگانے کے لئے سرتوڑ کوششیں جاری رکھے گا۔
بھارت کشمیر کے دروازے دنیا پر بند نہیں رکھ سکتا۔ انہوں نے کہا کہ بھارت کو اپنی جاری بربریت بند کر نا ہو گی۔ انہوں نے بین الاقوامی برادری اور انسانی حقوق کے اداروں مطالبہ کیا کہ وہ بھارتی تنظیمیں مظالم بند کروائیں۔ انکا مزید کہنا تھا کہ عالمی طاقتیں نریندر مودی کو کشمیریوں کا خون بہانے سے روکیں اور انسانی حقوق کمیشن کے نمائندوں کو کشمیر جانے کی اجازت دے دی جائے۔
وفاقی وزیر برائے انسانی حقوق نے پاکستان کا موقف دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے ہمیشہ مذاکرات کی بات کی ہے اور اس بار بھی پاکستان نے مذاکرات کی دعوت دیکر امن پسند ہونے کا ثبوت دیا۔

Leave your vote

0 points
Upvote Downvote

Total votes: 0

Upvotes: 0

Upvotes percentage: 0.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

اپنا تبصرہ بھیجیں